درجہ خامسہ کی تدریس کا منہج

جامعہ امام احمد حنبل بائی پاس ، قصور
میں
درجہ خامسہ کی تدریس کا منہج

الحمدللہ ۱۴ اگست ۲۰۱۴ کو جامعہ سٹی قصور میں شروع کیا گیا اب اس کو پانچواں سال شروع ہے ۔
۱:سنن ابی داود :
اس سال بڑی کلاس کو سنن ابی داود پڑھائی جارہی ہے ۔ اس کی تدریس کا منہج یہ اپنایا گیا ہے ۔
ہر کتاب کی سب سے پہلے غیر ثابت روایات پر جرح و تعدیل کے انداز میں بحث لکھوائی جاتی ہے ۔طلبہ اساتذہ کی نگرانی میں کتب جر ح و تعدیل سےخوب استفادہ کرتے ہیں ۔
پھر جو کتاب سنن ابی داود میں پڑھنی ہے وہی کتاب پہلے الجامع الکامل سے پڑھائی جاتی ہے ۔ اس سے اس کتاب کے متعلق تمام صحیح احادیث طالب علم کے سامنے آجاتی ہیں ۔پھر سنن ابی داود کی متعلقہ کتاب کی پڑھائی جاتی ہے ۔ سنن ابی داود دو اساتذہ پڑھا رہے ہیں تاکہ تسلی سے یہ کتاب مکمل کروائی جائے ۔
۲:جرح وتعدیل و علوم حدیث :
اس پریڈ میں تین کتب مخصوص ہیں ۔ جرح و تعدیل کے اصول و ضوابط از محمد ابراہیم بن بشیر الحسینوی ، ضوابط الجرح و التعدیل از شیخ عبدالعزیزرحمہ اللہ اور الرفع والتکمیل لشیخ عبدالحی لکھنوی رحمہ اللہ۔ پہلےجرح وتعدیل کے اصول وضوابط پڑھائی جارہی ہے اس کے بعد ضوابط پھر الرفع والتکمیل ۔نیز اس سال شرح نخبۃ الفکر بھی پڑھائی جائے گی ۔ ان شائ اللہ
۳:المختصر للقدوری :
اس کتاب کے ہر ہر مسئلے پر سیر حاصل بحث کروائی جاتی ہے اور راجح مسئلہ دلائل کے ساتھ واضح کیا جاتا ہے ۔
پہلے تین اسباق شیخ ابراہیم بن بشیر الحسینوی حفظہ اللہ پڑھارہے ہیں ۔
۴:الوجیز فی اصول الفقہ
۵:شرح قطر الندی وبل الصدی
۶:ترجمۃ القرآن
۷:نحوی صرفی اجرائ
آخری چار پریڈ شیخ احسان یوسف الحسینوی حفظہ اللہ تدریس کے فرائض سرانجام دے رہے ہیں ۔

About the author

ibnebashir

Add Comment

Click here to post a comment